زمرہ کے بغیر

قصہ سات خنزیروں کا

صبح کرنا شام کا، لانا ہے جوۓ شیر کا

رومی فوجیں سور پالتی تھیں۔ جنگ میں ان پر تیل چھڑک کر آگ لگا کر دشمن کی صفوں میں ہنکا دیتے تھے۔ سور خود بھی مرتے اور دشمن کی صفوں میں خوف اور افراتفری مچا دیتے۔ پھر رومی فوجی حملہ آور ہو کر ٹوٹی صفوں کو پچھاڑ دیتے۔

بچپن کا ایک واقعہ یاد آتاہے۔ بہت مبہم سی یاد باقی ہے۔ شائد پہلی جماعت میں پڑھتا تھا۔ سکول جانا شروع ہوا تو ایک بار شہد کی مکھیوں کے چھتے ٹوٹنے پر کچھ بچے زخمی ہوئے۔ میں نے مکھیوں کی یلغار اپنی آنکھوں سے دیکھی۔ بچوں کو خوف اور درد سے چلاتے دیکھا۔

لیکن مکھیاں بھی چلی گئیں ۔ جن کو ڈنگ لگے، ان کے منہ پھول کر کپا ہو گئے، لیکن چند دنوں میں وہ بھی ٹھیک ہو گئے۔ میں سکول پہنچا تو میری سویٹر پر اہک مکھی پھنسی بیٹھی تھی۔ ٹیچر نے اپنے ہاتھوں سے اتار کر پرے پھینکا۔

پھر ایک…

View original post 380 more words

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s